Hath me le k Sar betha hon

ہاتھ میں لے کے سر بیٹھا ہوں
مولا یہ کیا کر بیٹھا ہوں

میں بھی تیرا بندہ ہوں نا؟
کب سے تیرے دَر بیٹھا ہوں!

اندر باہر شور ہے "مَیں" کا
مَیں تو "مَیں" سے ڈر بیٹھا ہوں

جس کو دیکھ کے جی اُٹّھا تھا
اب میں اُس پہ مر بیٹھا ہوں

ایسا ہُوں مانوس قفَس سے
کاٹ کے اپنے پَر بیٹھا ہوں

مشرق مغرب تُو ہی تُو ہے
ہر جا تیرے گھر بیٹھا ہوں

Comments